جب مشہور فنکاروں نے اربوں روپے کی پیشکش ٹھکرادی

لندن: ہم جانتے ہیں کہ عالمی شہرت یافتہ فنکار اور گلوکار بے تحاشا دولت کماتے ہیں۔ تاہم ان کی زندگی میں بعض مقامات ایسے آتے ہیں جہاں وہ کسی کردار، کنسرٹ یا کمپنی کے معاہدے سے انکار کردیتے ہیں۔ اس لیے چند کروڑ ڈالر کی قربانی ان کے لیے کوئی معنی نہیں رکھتی۔

جب مشہور فنکاروں نے اربوں روپے کی پیشکش ٹھکرادی

تاہم اس پوسٹ میں آپ دیکھیں گے کہ بسا اوقات فنکار اور گلوکار ’’نہ‘‘ کہہ کر شہرت اور دولت سے منہ موڑ لیتے ہیں۔ اگرچہ ان کی اکثریت بظاہر اپنے فیصلوں پر پشیمان نہیں ہوتی لیکن انہیں شاید زندگی بھر اس کا قلق  رہا ہوگا۔ یہ بے رخی ظاہر کرتی ہے کہ کروڑوں ڈالر کمانے والے فنکاروں کےلیے چند لاکھ ڈالر چھوڑ دینا ایک معمولی بات ہوتی ہے۔

تاہم اس تناظر میں فنکاروں اور گلوکاروں کا باہمی یا ہدایتکاروں سے حسد، انا، اسکرپٹ سے عدم اتفاق یا پھر دوسرے منصوبوں میں مصروفیات کو بھی نظرانداز نہیں کیا جاسکتا۔ تو پہلے پڑھیے میوزیکل بینڈ ’ایبا‘ کی روداد جنہوں نے ایک ارب ڈالر کی پیشکش ٹھکرا دی تھی۔

ایبا اور ایک ارب ڈالر

1972 میں اپنے گانوں سے غیرمعمولی شہرت پانے والا میوزیکل گروپ ایبا عروج کے گراف پر پہنچ کر 1982 میں یکدم منتشر ہوگیا۔

سال 2000 میں ان کی آواز گم ہوچکی تھی اور 30 برس بعد انہیں دوبار جڑنے ’ری یونین‘ اور کنسرٹ کی پیشکش کی گئی، جس کےلیے ایک ارب ڈالر کی خطیر رقم کی پیشکش بھی کی گئی تھی۔ لیکن انہوں نے اتنی بڑی رقم کی آفر ٹھکراتے ہوئے اپنے مداحوں کو مزید افسردہ کردیا۔ ایبا کا مؤقف تھا کہ اس میں بہت وقت ضائع ہوگا اور انہیں کنسرٹ کے لیے ذہنی مشقت کرنا ہوگی۔

16 لاکھ ڈالر کا گیت، بالکل مفت

لوگوں کے بہت اصرار کے باوجود بھی کلوگار گوٹئے نے اپنے گیت پر یوٹیوب اشتہار نہیں کھولے۔

گوٹئے کا اصل نام ویلی ڈی بیکر ہے اور 2011 میں انہوں نے ’سم بڈی دیٹ آئی یوزڈ ٹو نو‘ نامی شاہکار

گیت گایا۔ فروری میں یہ گانا پوری دنیا میں مقبول ہوا اور ایک ارب 60 کروڑ مرتبہ سنا گیا۔ گوٹئے نے اس پر کوئی اشتہار نہیں لیا ورنہ وہ کم سے کم 16 لاکھ ڈالر ضرور بناسکتے تھے۔

 

جیری سائن فیلڈ کا گیارہ کروڑ ڈالر کی آفر سے انکار

جی ہاں! مزاحیہ اداکار، جیری سائن فیلڈ نے اپنے ایک مشہور کامیڈی شو میں مزید کام کرنے سے اس وقت انکار کردیا جب این بی سی کمپنی نے انہیں دس کروڑ ڈالر کی پیشکش کی تھی

1989 سے 1998 تک ان کا سٹ کم سائن فیلڈ دنیا بھر میں مقبول ہوا اور بند ہونے کے بعد این بی سی نے خطیر رقم کی بدولت اسے جاری رکھنے پر زور دیا لیکن جیری نے صاف انکار کردیا۔ صرف 22 اقساط کی بدولت گیارہ کروڑ ڈالر کی رقم بہت شاندار تھی۔ دلچسپ بات یہ ہے جیری نے اس فیصلے پر کبھی افسوس کا اظہار بھی نہیں کیا۔

 

جب وِل فیرل نے تین کروڑ ڈالر سے منہ موڑا

وِل فیرل کامیڈی فلموں میں اپنے غیرمعمولی کرداروں کی وجہ سے بہت مشہور ہیں۔ انہوں نے ایلف ٹو نامی فلم میں کام کرنے سے انکار کردیا تھا جس پر انہیں دو کروڑ نوے لاکھ ڈالر گنوانا پڑے تھے۔

ان کی فلم ایلف 2003 کی کرسمس میں ریلیز ہوئی اور پوری دنیا میں غیرمعمولی مقبولیت کے تحت رقم کمائی تھی۔ تاہم اس کے پروڈیوسر ایلف ٹو نامی دوسرا حصہ بنانا چاہتے تھے لیکن وِل نے اس میں کام سے انکار کردیا۔

 

بیٹ مین مووی سے انکار پر پانچ کروڑ ڈالر سے محروم

کرسچیئن بیل کو بیٹ فلم کے چوتھے حصے کی شاندار پیشکش کی گئی تھی جس کے بدلے انہیں سات ارب روپے یعنی 5 کروڑ ڈالر کی رقم ملنی تھی۔

ڈارک نائٹ ٹرائولوجی  اور اس سے قبل دو فلموں  نے پوری دنیا سےڈھائی ارب ڈالر کمائے تھے اور امکان تھا کہ چوتھی پروڈکشن بھی کامیاب ہوتی۔ کرسچیئن بیل اس فلم میں مجموعی طور پر 5 کروڑ 40 لاکھ ڈالر کا معاوضہ لے چکے تھے لیکن چوتھی فلم کے لیے انہیں پانچ کروڑ ڈالر کی غیرمعمولی پیش کش کی گئی تھی، اس کے باوجود بھی انھوں نے انکار کردیا تھا۔

 

جوڈی فوسٹر اور ڈیڑھ کروڑ ڈالر

ہمارے عہد کی بہترین اداکارہ ، جوڈی فوسٹر کی کئی فلمیں اب بھی یادوں میں تازہ ہیں۔ انہوں نے سائلنس آف دی لیمبس میں زبردست اداکاری کی تھی۔ تاہم ڈیڑھ کروڑ ڈالر کے باوجود انہوں نے اس فلم کے دوسرے حصے میں کام کرنے سے انکار کردیا تھا۔

 

کیانو ریوز اور اسپیڈ ٹو

کیانو ریوز کی وجہ شہرت اسپیڈ اور میٹرکس فلمیں ہیں، لیکن انہوں ںے اسپیڈ ٹو میں کام سے انکار کردیا تھا جس کےلیے انہیں ایک کروڑ بیس لاکھ ڈالر کی پیشکش کی گئی تھی۔

اس کی وجہ کیانو نے یہ بتائی کہ وہ فلم کے اسکرپٹ سے مطمئن نہ تھے۔

What's Your Reaction?

like
0
dislike
0
love
0
funny
0
angry
0
sad
0
wow
0