لاہور: کمسن گھریلو ملازمہ کی تشدد سے ہلاکت پر 3 ملزمان گرفتار

لاہور: اقبال ٹاؤن پولیس نے 12 سالہ گھریلو ملازمہ کی مبینہ تشدد سے ہلاکت میں ملوث 2 خواتین سمیت 3 ملزمان کو گرفتار کر لیا۔

لاہور: کمسن گھریلو ملازمہ کی تشدد سے ہلاکت پر 3 ملزمان گرفتار

پولیس کے مطابق نواں کوٹ شیخوپورہ کی 12 سالہ مصباح لاہور کے علاقے نرگس بلاک اقبال ٹاؤن میں یعقوب کے گھر ملازمہ تھی جو 27 جنوری کو گھر میں بے ہوشی کی حالت میں ملی۔ 

پولیس کا کہنا ہے کہ ورثا لڑکی کو لے کر شیخوپورہ چلے گئے جہاں ڈی ایچ کیو اسپتال میں اس کی موت کی تصدیق ہوگئی جس کے بعد ورثا لاش لے کر واپس لاہور آگئے، مقتولہ کے جسم پر تشدد کے نشانات واضح تھے۔

پولیس کے مطابق مقتولہ کے باپ نصراللہ کی مدعیت میں نامعلوم افراد کے خلاف مقدمہ درج  کرلیا گیا ہے۔

 پولیس کا بتانا ہے کہ  مدعی مقدمہ کو ملزمان کا نام پتا معلوم نہیں تھا، انہوں نے بتایا کہ ایک خاتون نذیراں نے ان کی بیٹی مصباح کو ملازمت پر رکھوایا تھا اور اس نے دو ماہ انہیں اپنی بچی سے ملنے بھی نہیں دیا۔

 پولیس نے نذیراں کے بیانات کی روشنی میں یعقوب، اس کی اہلیہ نسرین اور سائرہ کو مقدمے میں نامزد کر کے تینوں کو گرفتار کر لیا، ملزمان سے لوہے کی چین اور ڈنڈے بھی برآمد کیے گئے ہیں۔

تفتیشی افسران کے مطابق  مقتولہ سے زیادتی کا امکان نظر انداز نہیں کیا جا سکتا، اس لیے ملزم یعقوب کا ڈی این اے کرانے کے بعد چالان مکمل کیا جائے گا۔

What's Your Reaction?

like
0
dislike
0
love
0
funny
0
angry
0
sad
0
wow
0